Home / Pakistan / بحریہ ٹاؤن کا مالک “ملک ریاض” راؤ انوار کو کیوں بچانا چاہتا ہے ……؟

بحریہ ٹاؤن کا مالک “ملک ریاض” راؤ انوار کو کیوں بچانا چاہتا ہے ……؟

راؤ انوار کی ملک سے فرار کی کوشش ناکام ہونے کے بعد اس نے پراپرٹی ٹائکون ملک ریاض سے فون پر رابطہ کیا، ملک ریاض کو فرار میں ناکامی کی خبر سنائی جس پر ملک ریاض شدید پریشان ہوگیا۔ ملک ریاض خود لنڈن میں موجود ہے اس لیے اس نے پاکستان میں موجود اپنے زرایع کو فون گھمایا اور سخت ہدایات دیں کہ ہر صورت راؤ انوار کو ملک سے باہر بھیجنا ہے اور اس مقصد کے لیے اس نے ملک ریاض نے اپنا نجی طیارہ جس پر بحریہ ٹاؤن کا ٹیگ لگا ہوتا ہے اڑانے کا حکم دیا اور اسی طیارے میں راؤ انوار کو دبئی فرار کروانے کا پلان بنایا۔مگر مسئلہ یہ تھا کہ حکومت نے ملک کے تمام ایئرپورٹس کو راؤ انوار کی تفصیلات دے رکھیں تھیں کہ اس شخص کا نام ECL میں موجود ہے، اس کو کسی صورت باہر نہیں جانے دینا ہے۔ اب ملک ریاض کے لیے مزید مسئلہ کھڑا ہوگیا۔ اور آخرکار ملک ریاض نے سرکاری ایئرپورسٹ کے بجائے فوجی ایئرپورٹس استعمال کرنے کا پلان بنایا اور اس مقصد کے لیے پاک آرمی ہیڈکوارٹر یعنی جی ایچ کیون راولپنڈی سے رابطہ کیا اور فوجیوں سے درخواست کی کہ میں اپنا طیارہ فوجی اڈے سے اڑانا چاہتا ہوں اجازت دی جائے۔فوج سب جانتی تھی کہ یہ فوجی بیس کیوں استعمال کرنا چاہتا ہے مگر پھر بھی ملک ریاض کے بندوں سے دریافت کیا کہ جب راولپنڈی میں ہی سرکاری ایئرپورٹ موجود ہے تو آپ کو فوجی بیس استعمال کرنے کی کیوں نوبت پیش آرہی ہے تو بحریہ ٹاؤن کے بندے فوراََ گونگے ہوگئے کیونکہ انہیں منع کیا گیا تھا کہ فوج کو راؤ انوار کے مطلق نہیں بتانا ہے۔ لہٰذا اس گونگے پن کو فوج پہلے ہی جانتی تھی اور یوں ملک ریاض کی درد بھری درخواست کو ردی کی ٹوکری میں پھینک دیا گیا کہ چل نکل پتلی گلی سے، ادھر تیرا باپ بھی نہیں اڑ سکتا۔

اب سوال یہ ہے کہ ملک ریاض آخر کیوں راؤ کو باہر بھیجنا چاہتا ہے؟

کیونکہ راؤ انوار زرداری کے ساتھ ساتھ ملک ریاض کا بھی خاص بندہ ہے، ملک ریاض کو کراچی میں جب بھی زمینوں پر قبضہ کرنا ہو تو یہ کام راؤ انوار کے زریعے کرواتا ہے، راؤ انوار زمینوں کے مالکان پر جھوٹے مقدمات کرواکے انہیں دھمکاتا تھا اور پبات بڑھ جائے تو اپنی پرائیوٹ شوٹر ٹیم کے زریعے راتوں رات اغوا کرتا اور کسی ویران جگہ لیجاکر کہتا کہ بھاگو اور جیسے وہ بھاگتے تو راؤ پیچھے سے فائر کرکے انہیں ماردیتا اور ملک ریاض کے ہی تنخواہ دار میڈیا پرسنز کو فون کرکے بتاتا کہ فلاں دہشت گرد کو مقابلے میں مار دیا ہے۔ میڈیا فٹافٹ آتا اور راؤ انوار کی تصویریں کھینچتا رہتا اور پورے ملک میں اس کی تشہیر کروائی جاتی کہ کتنا بہادر ایس ایس پی ہے جو ہر روز دہشت گردوں کو مقابلے میں مارتا ہے۔ یاد رہے نقیب اللہ کو بھی ایسے ہی راؤ نے مارا تھا۔راؤ انوار بزنس ٹائیکون ملک ریاض کے لیے قیمقی زمیوں اور پلاٹوں پر قبضہ کرتا تھا، پورے ملیر میں راؤ انوار زمینوں پر قبضے کی وجہ سے مشہور ہے۔ ملک ریاض اور زرداری کو جو زمینیں پسند آجاتی بس اس پر انگلی رکھتے اور راؤ انوار زمینوں کے مالکان کو ڈرا دھمکا کر یا پھر قتل کرکے زمینیں پلیٹ میں رکھ کر اپنے آقاؤں کو پیش کردیتا تھا۔ بدلے میں راؤ انوار کے بےپناہ پیسہ، عورت اور عیاشی ملتی تھی۔ راؤ انوار نے پوری فیملی کو بیرون ملک منتقل کر رکھا ہے، وہاں بزنس کھول رکھا ہے، متحدہ عرب امارات کا اقامہ ہولڈر بھی ہے جبکہ یورپ کے ویزے بھی لگے ہوئے ہیں وہ بھی جعلی دستاویزات پر۔راؤ انوار کو ایک اور عزیز بلوچ کہا جائے تو غلط نہ ہوگا۔ عزیز بلوچ زرداری اور اس کی بہن فریال ٹالپر کے حکم پر مخالفین کو قتل کرتا تھا لیکن راؤ انوار زرداری کے ساتھ ساتھ ملک ریاض کے لیے بھی لوگوں کو ٹھکانے لگاتا تھا اور یہی وجہ ہے کہ راؤ کے معاملے میں ملک ریاض کے ہاتھ پاؤں ہل گئے ہیں اور وہ اپنے ذاتی طیارے پر بھی راؤ کو ہر صورت بیرون ملک منتقل کرنا چاہتا ہے۔ اگر راؤ انوار گرفتار ہوگیا تو پھر وہ سب اگل دے گا اور زرداری کے ساتھ ساتھ ملک ریاض کے کالے کرتوت بھی کھل کر بیان کردے گا اس لیے ملک ریاض اپنے پیسے کو استعمال کر رہا ہے۔اللہ کی لاٹھی بےآواز ہوتی ہے، ملک ریاض نے جتنا ملک کو لوٹا ہے اب اس کا حساب بھی قریب ہوتا جارہا ہے، کراچی میں الطاف حسین کی ایم کیو ایم پر جب بھی برا وقت آتا ہے تو یہی ملک ریاض آگے بڑھ کر ان کی مدد کرتا تھا کیوں ؟ کیونکہ ملک ریاض کے بھارت میں اثاثے ہیں اور وہاں رلیف چاہنے کے لیے یہاں موجود بھارت کے ایجںٹوں کی مدد کرنا ضروری ہے۔ ملک ریاض پاکستان کا سب سے کرپٹ آدمی ہے جو اپنے ہر کام کروانے کے لیے رشوت کا استعمال کرتا ہے، کھلم کھلا اعتراف کرتا ہے کہ پاکستان میں کوئی بھی کام رشوت کے بغیر نہیں ہوتا اسی لیے خود ہی رشوت دیتا ہے اور دوسروں سے بھی لیتا ہے لیکن اس کی رشوت دینے کا انداز باقی لوگوں سے زرا مختلف ہوتا ہے۔ وہ ایسے کہ یہ حکومتوں کو پیسے دیتا ہے، اپنے ذاتے جہاز اور ہیلی کاپٹر میں گھماتا ہے، سیاسی لیڈروں کو محمل نما گھر مفت بناکر تحفے میں دیتا اور پھر بدلے میں اپنے بحریہ ٹاؤن کے لیے مفت زمینیں مانگتا ہے۔ آپ نے کئی مرتبہ اخباروں میں چھپنے والی ملک ریاض کے طیارے اور ہیلی کاپٹر کی وہ تصاویر بھی دیکھی ہوں گی جس میں آصف زرداری یا بلاول بھٹو سفر کرتے نظر آتے ہیں۔ جس طرح عمران خان کی ای ٹی ایم مشین جہانگیر ترین ہے، نواز شریف کی میاں منشاء ہے ٹھیک اسی طرح زرداری کی ای ٹی ایم مشین یہی ملک ریاض ہے۔ اب وقت آگیا ہے کہ ملک ریاض کی اصلیت بھی عوام کو دکھائی جائے

About fatima

Check Also

بلوچستان میں پاک فوج کو بڑی کامیابی حاصل

بلوچستان میں پاک فوج کو بڑی کامیابی حاصل تربت صوبہ بلوچستان کے شہر تربت میں …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *