Breaking News
Home / Pakistan / سانحہ ماڈل ٹاؤن پر اب دھرنا، عوامی عدالت یا کچھ بھی ہوسکتا ہے، طاہرالقادری

سانحہ ماڈل ٹاؤن پر اب دھرنا، عوامی عدالت یا کچھ بھی ہوسکتا ہے، طاہرالقادری

لاہور: پاکستان عوامی تحریک کے سربراہ ڈاکٹر طاہرالقادری کا کہنا ہےکہ سانحہ ماڈل ٹاؤن اب عوامی تحریک کا مقدمہ نہیں  اب معاملات قومی قیادت نے اپنے ہاتھ میں لے لیے ہیں اور  اب عوامی عدالت، احتجاج اور دھرنے سمیت کچھ بھی ہوسکتا ہے۔

عوامی تحریک کے سربراہ ڈاکٹر طاہر القادری نے سانحہ ماڈل ٹاؤن کی جوڈیشل انکوائری پبلک کرنے کے عدالتی فیصلے کے بعد آئندہ کا لائحہ عمل طے کرنے کے لیے آل پارٹیز کانفرس بلانے کا اعلان کیا تھا۔

عوامی تحریک کی ماڈل ٹاؤن سیکرٹریٹ میں ہونے والی اے پی سی میں پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی)، پاکستان پیپلز پارٹی (پی پی پی)، مسلم لیگ (ق)، متحدہ قومی موومنٹ (ایم کیو ایم) پاکستان، پاک سرزمین پارٹی (پی ایس پی) اور مجلس وحدت مسلمین سمیت اپوزیشن کی دیگر جماعتیں شرکت کررہی ہیں۔

اے پی سی میں سابق وزیراعظم آزاد کشمیر سردار عتیق، شاہ محمود قریشی، جہانگیر ترین، میاں محمود الرشید، لیاقت بلوچ، فاروق ستار، رحمان ملک، منظور وٹو، مصطفیٰ کمال، کاملی علی آغا، علامہ راجہ ناصر عباس، صاحبزادہ حامد رضا، صاحبزادہ ابو الخیر محمد زبیر، قاری زوار بہادر سمیت دیگر سیاسی و مذہبی شخصیات شریک ہیں۔

پاکستان عوامی تحریک کے سربراہ ڈاکٹر طاہرالقادری نے کل جماعتیں کانفرنس کے آغاز میں کانفرنس میں شرکت کرنے والی جماعتوں کے رہنماؤں کا شکریہ ادا کیا۔

طاہرالقادری کا کہنا تھا کہ اب معاملات قومی قیادت نے اپنے ہاتھ میں لے لیے ہیں، اب عوامی عدالت بھی لگ سکتی ہے، احتجاج بھی ہوسکتا ہے، دھرنا بھی ہوسکتا ہے، آئین و قانون کے دائرے میں کچھ بھی ہوسکتا ہے، اب اگر دھرنا ہوگا تو آپ کے اقتدار کو مرنا ہوگا، آپ بچ نہیں سکتے، ہمارے ساتھ آئین و قانون اور جمہوریت کی طاقت ہے، پاکستان کے کروڑوں شہریوں کی طاقت ہے، ااور سب سے بڑھ کر للہ کی طاقت ہے۔

About fatima

Check Also

آرمی کیپٹن نے دوست کی آرمی یونیفارم پہنے لڑکے کو رنگے ہاتھوں پکڑلیا

آرمی کیپٹن نے دوست کی آرمی یونیفارم پہنے لڑکے کو رنگے ہاتھوں پکڑلیا لاہور (ویب …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *